پاکستان

اسپتالوں کو آکسیجن کی سپلائی برقرار رکھنے کیلئے بیک اپ پلان پر کام شروع، شبلی فراز

وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی شبلی فراز نے کہا ہے کہ پاکستان میں کورونا وائرس کی صورتحال تشویشناک ہو چکی ہے تاہم اسپتالوں آکسیجن کی سپلائی برقرار رکھنے کیلئے بیک اپ پلان پر کام شروع کر دیا ہے۔

ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی، وزارت صنعت و پیداوار اور دیگر متعلقہ اداروں سے رابطے کیے ہیں اور آکسیجن کی سپلائی بحال رکھنے کیلئے بیک اپ پلان پر کام شروع کردیا ہے۔
شبلی فراز نے کہا کہ ملک میں کورونا وبا شدت اختیار کررہی ہے اور ہم نہیں چاہتے کہ صورتحال بھارت جیسی ہو۔ملک میں آکسیجن کی سپلائی اینڈ ڈیمانڈ پر نظر رکھی ہوئی ہے۔

وفاقی وزیر شبلی فراز نے کہا کہ وزیر صنعت اور آکسیجن سپلائرز سے آج بھی رابطہ ہوا ہے۔ آکسیجن کے صنعتی استعمال کو مد نظر رکھتے ہوئے فیصلہ کریں گے۔ ابھی تک آکسیجن کی ڈیمانڈ اور سپلائی تسلی بخش ہے۔

شبلی فراز نے کہا کہ ملکی معیشت لاک ڈاوَن یا اسپتالوں پر بوجھ کی متحمل نہیں ہو سکتی۔ ہمارا ہیلتھ کیئر سسٹم یہ بوجھ برداشت کرنے کے قابل نہیں ہے۔


subscribe YT Channel


Source

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

ADVERTISEMENT
Back to top button