پاکستان

ملک بھر میں عید تک تعلیمی ادارے بند رکھنے کا اعلان

امتحانات کی صورت حال اور تعلیمی اداروں کو کھولنے یا بند رکھنے سے متعلق فیصلہ کیا جائے گا۔اجلاس میں وزرائے تعلیم اور صحت ویڈیو لنک کے ذریعے شریک ہیں۔ آج ہونے والے اجلاس میں تعلیمی اداروں کو کھولنے یا نہ کھولنے سے متعلق فیصلہ کیا جائے گا۔ این سی اوسی اجلاس میں امتحانات کی صورت حال کا بھی جائزہ لیا جائے گا۔ تعلیم اور صحت سے متعلق ملک بھر کی صورت حال کا جائزہ لیکر متفقہ فیصلہ کیا جائے گا۔

قبل ازیں وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کا کہنا ہے کہ ملک بھر میں تعلیمی اداروں کو کھلے رکھنے یا بند رکھنے کا مشترکا فیصلہ آج بروز منگل 6 اپریل کو این سی او سی کے اجلاس میں کیا جائے گا۔ مائیکرو بلاگنگ سائٹ پر وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کا کہنا تھا کہ بروز منگل 6 اپریل کو این سی او سی میں وزرائے تعلیم اور صحت کا اجلاس ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ جو بھی فیصلہ لیا جائے گا وہ متفقہ وزارت صحت اور تعلیم کی مشاورت سے ہوگا۔

واضح رہے کہ سندھ حکومت کی جانب سے کراچی سمیت صوبے بھر میں پہلی سے 8 ویں جماعت تک اسکولوں کو 15 روز کیلئے بند کرنے کا حکم دیا ہے۔ فیصلے کا اطلاق سرکاری اور نجی اسکولوں پر ہوگا۔

فزیکل کلاسز معطل رہیں گی۔ اس دوران بچوں کی تعلیم کو آن لائن، ہوم ورک اور دیگر ذرائع سے جاری رکھا جاسکتا ہے۔

پرائیوٹ اسکولز ایسوسی ایشنز کے چئیرمین حیدر علی نے سماء سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ تعلیمی اداروں کی بندش مسترد کرتے ہیں۔ مکمل لاک ڈاؤن سے پہلے اسکولز بند نہیں کیے جائیںگے۔ آن لائن کلاسز سے دنیا بھر میں مطلوبہ نتائج حاصل نہیں ہوئے، اس لئےاسمارٹ لاک ڈاؤن کی پالیسی اختیار کی جائے۔ حیدر علی نے بتایا کہ اسکول بند ہونے سے 10 لاکھ بچے اسکول واپس نہیں آسکے ہیں۔

اس سے قبل بروز ہفتہ 3 اپریل کو صوبائی وزیر تعلیم سندھ سعید غنی کی جانب سے ہونے والے محکمہ تعلیم کی اسٹیئرنگ کمیٹی میں رمضان المبارک سے متعلق نئے اوقات کار جاری کیے گئے۔

فیصلے کے مطابق صبح کی شفٹ والے اسکولوں 7:30 سے 11:30 ہونگے۔

 


subscribe YT Channel


Source

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button